”ہم تُم اے پی سی میں بند ہوں اور چابی کھو جائے”

”ہم تُم اے پی سی میں بند ہوں اور چابی کھو جائے”


پاکستان تحریک انصاف کے رہنما ڈاکٹر عامر لیاقت حسین نےٹویٹر پر اپنے پیغام میں پیپلز پارٹی کی رہنما شیری رحمان سے معافی مانگ لی۔ گذشتہ روز ڈاکٹر عامرلیاقت نے ٹویٹر پر اپنے ایک پیغام میں شیری رحمان اور اویس احمد نورانی کی تصویر شئیر کی اور لکھا کہ ” ہم تُم اے پی سی میں بند ہوں ، اور چاپی کھو جائے”۔

شیری رحمان اور اویس احمد نورانی کی یہ تصویر متحدہ اپوزیشن کی اے پی سی کے دوران لی گئی تھی .جس پر ڈاکٹر عامرلیاقت نے تبصرہ کیا۔ ڈاکٹر عامر لیاقت حسین کو اس ٹویٹ پر تنقید کا سامنا کرنا پڑا. جس پر انہوں نے اپنا ٹویٹ ڈیلیٹ کر دیا اور ٹویٹر پر شیری رحمان سے معذرت بھی کر لی۔
ڈاکٹر عامر لیاقت حسین نے اپنے پیغام میں لکھا ھے. کہ شیری رحمان کے بارے میں میرا ٹویٹ ٹویٹر نے نہیں بلکہ میں نے خود ڈیلیٹ کیا ہے۔ انہوں نے کہاکہ ٹویٹ کرنے کے بعد مجھے احساس ہوا کہ شاید اس سے آپ کو بُرا لگے۔

عامر لیاقت حسین نے شیری رحمان کو مخاطب کرتے ہوئے کہا . آپ نے قومی اسمبلی میں بہت سے مسائل اُجاگر کیے. تب بھی میں اسمبلی کا حصہ تھا اور اسی لیے میں آپ کی عزت کرتا ہوں۔ یہ ایک غلط فہمی ہے۔ میں نے اپنے ٹویٹ میں متحدہ مجلس عمل کے اویس نورانی کو اپنا ہدف بنایا تھا آپ کو نہیں لیکن پھر بھی میں اپنے اس ٹویٹ پر آپ سے معذرت خواہ ہوں۔

اپنا تبصرہ بھیجیں