65 سالوں سے سیلنڈر کے اندر رہنے والے آدمی کی درد ناک کہانی۔۔۔ وجہ جان کر آپ کے بھی ہوش اُڑ جائیں گے

65 سالوں سے سیلنڈر کے اندر رہنے والے آدمی کی درد ناک کہانی۔۔۔

65 سالوں سے سیلنڈر کے اندر رہنے والے آدمی کی درد ناک کہانی۔۔۔ وجہ جان کر آپ کے بھی ہوش اُڑ جائیں گے

اگر کچھ دیر کے لئے سوچیں کے آپ کو ساری زندگی کسی چیز میں پھنس کر یا قید رہ کر گزارنی پڑے تو آپ کو کیسا لگے گا؟ایسا سوچنے سے بھی رونگٹے کھڑے ہو جاتے ہیں اور ہم فوری دعا کرتے ہیں کہ خدا ہمیں کبھی کسی کا محتاج نہ بنائے، آج ہم آپ کو ایک ایسی ہی کہانی بتانے جا رہے ہیں جہاں ایک شخص 65 سالوں سے ایک سیلنڈر کے اندر رہ کر زندگی گزار رہا ہے۔

اس شخص کا نام پول ایلگزنڈر ہے پول پچھلے 65 سالوں سے اس ہی سیلنڈر کے اندر ہوجود ہیں،وہ اسی سیلنڈر کے اندر اپنے سب کام کرتے ہیں، کھاتے ہیں، پیتے ہیں، پینٹنگ کرتے ہیں اور باقی سب کچھ!آپ کے ذہن میں اب یہ سوال گردش کر رہا ہوگا کہ آخر یہ شخص اتنی دشوار زندگی کیوں گزار رہا ہے اور سیلنڈر کے اندر اتنے سالوں سے کیوں ہیں؟ تو ہم آپ کو اس کی وجہ بتاتے ہیں۔

دراصل پول الیگزنڈر جب 6 سال کے تھے تب انہیں پولیو ہو گیا تھا، اور پولیو کے بعد ان کے پورے جسم نے ہی کام کرنا چھوڑ دیا تھا، جس کی وجہ سے یہ سانس بھی نہیں لے پا رہے تھے جسکے بعد ڈاکٹروں نے انہیں ایسے سیلنڈر میں رکھ دیا جس میں وہ باآسانی سانس لے سکیں۔وہ 6 سال کی عمر سے 71 سال کی عمر تک پہنچ گئے ہیں مگر آج تک اس ہی سیلنڈر کے اندر زندگی گزار رہے ہیں

ان کے ساتھ ہر وقت ایک نرس موجود رہتی ہے جو ان کا خیال رکھتی ہے اور ان کے سارے کام بھی کرتی ہے۔حیرت کی بات تو یہ کہ پول لیٹے لیٹے ہی مُنہ میں برش پکڑ کر پینٹنگ بھی کرتے آ رہے ہیں، ان کی جینے کی خواہش نے انہیں آج تک زندگی رکھا ہوا ہے اور وہ کبھی مایوس نہیں ہوتے۔

Leave a Reply